پايگاه اطلاع رساني دفتر آيت الله العظمي شاهرودي دام ظله
ArticleID PicAddress Subject Date
{ArticleID}
{Header}
{Subject}

{Comment}

 {StringDate}
Thursday 13 December 2018 - الخميس 04 ربيع الثاني 1440 - پنج شنبه 22 9 1397
 
 
 
 
  • طلاق کے احکام  
  • 2010-01-14 11:33:24  
  • CountVisit : 200   
  • Sendtofriend
  •  
  •  
  • مسئلہ٤٩٢:جو مرد اپنی عورت کو طلاق دیتا ہے اس کو بالغ و عاقل ہونا چاہیۓ اور وہ اپنے اختیار سے اس کو طلاق دے اور اگر اسکو مجبور کریں کہ وہ اپنی عورت کو طلاق دے تو طلاق باطل ہے نیز وہ طلاق کا قصد بھی رکھتا ہو پس اگر وہ طلاق کے صیغہ کو مذاق سے کہے تو طلاق صحیح نہیں ہے۔

    مسئلہ٤٩٣:عورت طلاق کے وقت حیض و نفاس کے خون سے پاک و صاف ہو اور اس کے شوہر نے اس کی پاکیزگی کی حالت میں اس سے ہمبستری نہ کی ہو اور ان دو شرطوں کی تفصیل کے لۓ توضیح المسائل میں ملاحظہ فرمائیں۔

    مسئلہ٤٩٤:اگر کوئ شخص اس عورت سے جو حیض و نفاس کے خون سے پاک ہو ہمبستری کرے اور سفر کرے چنانچہ وہ اس کو سفر میں طلاق دینا چاہے تو اتنی مدت صبر کرے کہ جتنے دنوں میں وہ عورت عام طور سے پاک رہنے کے بعد خون دیکھ کر دوبارہ پاک ہو جاتی ہے اور چنانچہ وہ اسی شہر میں ہو لیکن اس عورت کے پاس نہ جاسکتا ہو کہ جو اسکی حالت سے مطلع ہو اور اس کو طلاق دینا چاہے تو اسکو ایک مہینہ صبر کرنا چاہیۓ تاکہ اسے گمان حاصل ہو جاۓ کہ اس نے ایک مرتبہ خون دیکھا ہے اور وہ بعد میں پاک ہوئی ہے۔

    مسئلہ٤٩٥:طلاق عربی صیغہ میں صحیح طور سے پڑھی جاۓ اور دو عادل مرد اسے سنیں اور اگر خود شوہر صیغہ طلاق جاری کرنا چاہے اور اس کی زوجہ کا نام مثلاً فاطمہ ہو تو یوں کہے؛’’زوجتی فاطمہ طالق‘‘یعنی میری زوجہ فاطمہ آزاد ہے اور اگر کسی کو وکیل کرے تو وہ وکیل اس طرح کہے؛’’زوجۃُ موکلی فاطمہ طالق‘‘۔

     
     
  • RelatedArticle
  •  
    نام :
    Lastname :
    E-Mail :
     
    OpinionText :
    AvrRate :
    %86
    CountRate :
    1
    Rating :
     
     
     
     

    The Al-ul-Mortaza Religious Communication Center, Opposite of Holy Shrine, Qom, IRAN
    Phone: 0098 251 7730490 - 7744327 , Fax: 0098 251 7741170
    Contact Us : info @ shahroudi.net
    Copyright : 2000 - 2011